کرونا وائرس، بلوچستان میں11 لاکھ کیسز ظاہر ہونے کا خدشہ

کراچی (ویب ڈیسک) بلوچستان میں کرونا وائرس کا پھیلاؤ خطرناک حد تک بڑھنے کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے۔ ماہرین نے صوبائی حکومت کو لاک ڈاؤن سخت کرنے کی تجویز دی ہے۔ صوبائی ڈائریکٹر جنرل برائے صحت سلیم ابڑو نے خبردار کیا ہے کہ اگر صوبے میں لاک ڈاؤن میں سختی نہیں کی گئی تو 11 جولائی تک بلوچستان میں کرونا وائرس کے متاثرین کی تعداد 11 لاکھ تک پہنچ سکتی ہے۔
کوئٹہ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا مزید کہنا تھا کہ دسمبر تک مزید 95 لاکھ کیسز سامنے آنے کا خدشہ ہے جس کے باعث محکمہِ صحت کی جانب سے صوبے میں 15 سے 20 روز کے لئے کرفیو نافذ کرنے کی تجویز بھی دے رکھی ہے کیونکہ بلوچستان میں کرونا وائرس کی مقامی منتقلی کے کیسز میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے۔
سلیم ابڑو نے کے مطابق محکمہِ صحت نے عید سے قبل چار روز تک بین الضلعی نقل و حرکت پر پابندی عائد کرنے کی بھی تجویز دی ہے اور انہوں نے لوگوں کو کرونا وائرس سے بچاؤ کے لئے احتیاطی تدابیر کا خاص خیال رکھنے پر زور دیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں