وزیراعظم نے 20 مئی سے 30 ٹرینیں چلانے کی منظوری دے دی ہے: شیخ رشید

کراچی، ویب ڈیسک

وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے عید تک ریل کو بحال کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ 20 مئی سے 31 مئی تک 30 ٹرینیں چلا رہے ہیں۔

راولپنڈی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ وزیراعظم نے 20 مئی سے 30 ٹرینیں چلانے کی اجازت دی ہے اور اگر حالات بہتر ہوئے تو یکم جون کو مزید ٹرینیں چلائیں گے۔

جزوی طور پر شروع کی جانے والی ٹرینوں میں خیبر میل، عوام ایکسپریس، جعفر ایکسپریس، تیزگام، گرین لائن، پاکستان ایکسپریس، مہر ایکسپریس، سبک رفتار، اسلام آباد ایکسپریس، پاک بزنس، قراقرم ایکسپریس، شاہ حسین، ملت ایکسپریس، علامہ اقبال ایکسپریس، سکھر ایکسپریس شامل ہیں۔

شیخ رشید کا کہنا ہے کہ کل پشاور میں انتظامات دیکھوں گا اور پھر پرسوں گرین لائن کوروانہ کروں گا،کسی ڈویژن میں ایس اوپیز کی خلاف ورزی ہوئی تو ڈویژن ہیڈ کےخلاف کارروائی کروں گا۔

ان کا کہنا تھا کہ 31 مئی تک حالات ٹھیک رہے تو تمام ٹرینیں یکم جون سے کھول دیں گے، لوگ ضابطہ کار پرعمل کرتے ہیں تو سب ٹھیک ہے، شہری کسی مسافر کو چھوڑنے یا لینے نہ آئیں۔

وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ کسی صوبے سے کوئی اختلاف نہیں ہے،ریلوے چاروں صوبوں کی زنجیر ہے، ٹرین میں سواری آدھی کر دی ہے، ریٹ میں کوئی اضافہ نہیں ہوا جب کہ ریلوے کا عملہ بڑھا دیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم صوبوں کے ماتحت نہیں اس کے باوجود صوبوں کا احترام کرتے ہیں، وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ سے کہوں گاکہ ہمارے انتظامات کو ٹھیک رکھیں۔

ریلوے کی جانب سے ایس او پیز میں واضح کیا گیا ہے کہ اگر کوئی مسافر ان ایس او پیز کی خلاف ورزی کرتے ہوئے سماجی فاصلہ برقرار نہیں رکھے گا تو اسے پہلی دفعہ 500 روپے جرمانہ، دوسری دفعہ ایک ہزار روپے اور تیسری دفعہ اسے اگلے اسٹیشن میں ٹرین سے اتار دیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ بغیر بکنگ اور ٹکٹ کے کوئی شخص اسٹیشن نہیں آسکتا، کراچی، لاہور، ملتان، پشاور اور کوئٹہ میں ہماری پولیس کی نفری 7 ہزار ہے اور ایمرجنسی نافذ کی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہماری پولیس اس بات کو یقینی بنائے گی کہ مسافروں کے علاوہ کوئی اور اسٹیشن میں داخل نہ ہوں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں