پولیس نے صحافی عزیز میمن کے قتل میں ملوث ملزم نذیر سہتو سمیت 15 ملزمان کو گرفتار کر لیا۔

کراچی، ویب ڈیسک

صحافی عزیز میمن قتل کیس میں اہم پیش رفت سامنے آئی ہے۔ پولیس نے نواب شاہ، نوشہروفیروز اور خیرپور میں چھاپہ مار کارروائیوں کے دوران ملزم نذیر سہتوسمیت پندرہ افراد کوگرفتار کر کے نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا۔

پولیس حکام کے مطابق کچھ ملزمان کا ڈی این اے مقتول کے ناخن سے ملنے والے ڈی این اے سے میچ کرگیا۔

اس سے قبل گزشتہ ماہ 10 اپریل کو رضوانہ خانزادہ محمد حسین اور ڈاکٹر علی محمد پروفیسر محمد اکبر کی جانب سے صحافی عزیز میمن کی پوسٹ مارٹم رپورٹ جاری کی گئی تھی۔

پوسٹ مارٹم رپورٹ میں کہا گیا تھا کہ مقتول کے ناخن سے ایک سے زائد افراد کے اجزا ملے، انسانی اجزا ملنے سے پتہ چلتا ہے کہ مقتول نے ملزمان سے مزاحمت کی۔

یاد رہے کہ رواں سال فروری میں صوبہ سندھ کے ضلع نوشہروفیروز کے شہر محراب پور میں سندھی چینل کے ٹی این نیوز اور کاوش اخبار کے رپورٹر عزیز میمن کی لاش نہر سے برآمد ہوئی تھی جس کے بعد قتل کے شبے میں ان کے ساتھی کیمرا مین سمیت 2 افراد کو حراست میں لیا گیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں