مقبوضہ کشمیر سے متعلق بھارتی اقدام پر پاک بھارت روایتی جنگ کا خطرہ ہے، وزیراعظم

اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان نے مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت ختم کرنے کے بھارتی اقدام کے خلاف عالمی فوجداری عدالت (انٹرنیشنل کرمنل کورٹ) جانے کا اشارہ دے دیا۔ عمران خان نے مقبوضہ کشمیر کو بھارت میں شامل کرنے کے بھارتی حکومت کے اقدام کے بعد پاک بھارت روایتی جنگ کے خطرے کا بھی اشارہ دے دیا۔پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے خطاب میں عمران خان نے کہا کہ نسل پرست بھارتی حکمرانوں نے ملکی اور بین الاقوامی قوانین پامال کردیے، تحریک آزادی کشمیر اب مزید شدت اختیار کر جائے گی، مقبوضہ کشمیر کے اندر سے پلوامہ جیسے حملے ہو سکتے ہیں جن کا الزام بھارت پاکستان پر دھرے گا، دنیا سے اپیل کرتے ہیں کہ جو بھارت نے کیا وہ ہم مانیں گے نہیں۔ اب ہم تباہی کی طرف جا رہے ہیں، اگر دونوں ایٹمی طاقتوں کا ٹکراؤ ہوا تو اثرات پوری دنیا تک جائیں گے۔وزیراعظم جب پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے اظہار خیال کرنے آئے تو اپوزیشن نے شور شرابا کیا جس پر وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ اس سیشن کو کشمیری اور پوری دنیا دیکھ رہی ہے، اگر آپ یہ سیشن خراب کرنا چاہتے ہیں تو میں بیٹھ جاتا ہوں، یہاں سے پیغام جانا چاہیے کہ قوم اکٹھی ہے۔وزیراعظم کے اظہار خیال پر اپوزیشن لیڈر شہبازشریف نے نشست سے اٹھ کر اپوزیشن ارکان سے خاموشی اختیار کرنے کی درخواست کی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں