دریائے سندھ میں سیلاب، گھوٹکی کے کچے میں درجنوں گائوں اور فصلیں زیر آب

گھوٹکی (رپورٹ جعفر شیخ ) دریائے سندھ میں گھوٹکی کے مقام پر درمیانے درجے کا سیلاب ہے، پانی کی سطح بلند ہونے سے درجنوں دیہات کا زمینی رابطہ منقطع ہوگیا ہے۔علاقہ مکین نقل مقانی پر مجبور ہیں ۔سیلابی پانی گاؤں جاڑو شیخ، نور لکھن، وستی جیون اور آندل سندرانی سمیت کئی دیہات میں داخل ہو چکا ہے۔مکینوں کے گھروں میں گندم سمیت دیگر سامان پانی کی نظر ہو چکا ہے۔ہزاروں ایکڑ فصل بھی تباہ ہو چکی ہے۔درجنوں دیہات کا زمینی رابطہ منقطع ہو چکا ہے، سیلاب متاثرین جانیں بچانے کے لئے اپنی مدد اپ کے تحت کشتیوں میں اور تیر کر نقل مکانی پر مجبور ہیں۔ متاثرین کو خوراک کی بھی شدید قلت کا سامنا ہے ،ضلع انتظامیہ ابھی تک سیلاب متاثرین کی مدد کے لئے نہیں پہنچی۔ متاثرین نے حکومت سے فوری مدد کی اپیل کی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں