جنوبی وزیرستان میں فائرنگ سے زخمی پی ٹی ایم رہنما عارف وزیر چل بسے۔


کراچی، ویب ڈیسک
جنوبی وزیرستان کے علاقے وانا میں فائرنگ سے زخمی ہونے والے پشتون تحفظ موومنٹ (پی ٹی ایم) کے رہنما عارف وزیر ہفتے کو زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے۔

وانا کے اسٹیشن ہاؤس افسر (ایس ایچ او) عثمان خان نے ان کی موت کی تصدیق کی۔

واضح رہے کہ حملے کے بعد انہیں علاج کے لیے اسلام آباد منتقل کیا گیا تھا جہاں وہ دم توڑ گئے۔

واضح رہے کہ عارف وزیر رکن قومی اسمبلی اور پی ٹی ایم رہنما علی وزیر کے کزن تھے اور تقریباً ایک ماہ قبل ضمانت پر جیل سے رہا ہوئے تھے۔

ادھر حقوق کے لیے کام کرنے والے گروپ ایمنسٹی انٹرنیشنل نے ایک بیان میں کہا کہ اتھارٹیز کو عارف وزیر پر حملے کی آزادانہ اور مؤثر تحقیقات کرنی چاہئیں اور مشتبہ قصورواروں کو احتساب کے کٹہرے میں لانا چاہیے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں