کالعدم بلوچ لبریشن آرمی کے دو کمانڈرز سمیت 16 فراریوں نے ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شمولیت اختیار کر لی ۔

لاڑکانہ (رپورٹ: نور احمد عباسی) کالعدم بلوچ لبریشن آرمی کے دو کمانڈرز سمیت 16 فراریوں  نے ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شمولیت اختیار کر لی ۔  لاڑکانہ رینجرز ہیڈ کوارٹر میں تقریب منعقد کی گئی جس  میں سیکٹر کمانڈر رینجرز کرنل ساجد، ونگ کمانڈر کرنل محمود، ڈی آئی جی لاڑکانہ عرفان بلوچ، کمشنر لاڑکانہ سلیم رضا سمیت دیگر نے شرکت کی۔  تقریب میں کالعدم بلوچ لبریشن آرمی سے تعلق رکھنے والے دو کمانڈرز سمیت 16 فراریوں نے اپنے ہتھیار ڈال کر قومی دھارے میں شمولیت اختیار کر لی ہتھیار ڈالنے والوں میں کمانڈر صالح محمد گروپ کے آٹھ اور ڈپٹی کمانڈر خادم حسین گروپ کے بھی آٹھ فراری شامل ہیں جبکہ فراریوں کا تعلق بلوچستان کے علاقے مچھ اور بولان سمیت دیگر سے ہے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ونگ کمانڈر کرنل محمود کا کہنا تھا کہ ہتھیار ڈالنے والے فراری بلوچستان اور سندھ میں دہشتگردی کی وارداتوں میں شامل رہے ہیں لیکن ہر ہتھیار چھوڑ کر ملکی مفاد میں آگے آنے والے کا خیر مقدم کیا جائے گا تقریب میں بی ایل اے کمانڈرز کا کہنا تھا کہ ملکی مفادات کے خلاف انہیں استعمال کیا گیا اب ملک کے دفاع کی خاطر پاک افواج کے شانہ بہ شانہ کھڑے ہیں اور ضرورت پڑنے پر مقبوضہ کشمیر کیلئے ہتھیار اٹھائیں گے پاک افواج نے بلوچستان میں امن قائم کیا ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں