سانحہ 12 مئی کو 12 برس بیت گئے


کراچی ( ویب ڈیسک) کراچی کی تاریخ کا سیاہ دن سانحہ 12 مئی 2007 جس دن ہنگامہ آرائی، فائرنگ اور پرتشدد واقعات میں 50 سے زائد افراد جاں بحق ہوئے، قانون نافذ کرنے والے ادارے آج تک اس سانحہ کے مرکزی کرداروں کو گرفتار نہیں کر سکے۔
سانحہ 12 مئی 2007 کراچی کی تاریخ کا ایک سیاہ باب ہے۔ 12 سال قبل آج ہی کے دن اس شہر کو آگ اور خون میں نہلایا گیا تھا۔
اس وقت کے چیف جسٹس، جسٹس افتخار چوہدری کی کراچی آمد کے بعد شروع ہونے والی ہنگامہ آرائی میں 50 سے زائد افراد کو قتل کر دیا گیا تھا۔
فائرنگ اور جلاؤ گھیراؤ کے واقعات میں سینکڑوں افراد زخمی بھی ہوئے، ایم کیو ایم، پیپلز پارٹی اور اے این پی سانحہ 12 مئی کی ذمہ داری ایک دوسرے پر عائد کرتی ہیں لیکن بارہ سال گزر جانے کے باوجود آج تک اس سانحے کے ذمہ داروں کا تعین نہیں ہو سکا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں