ملیر، بینائی سے محروم فنکار کا احتجاج

ملیر (نامہ نگار، منظورسولنگی) پپری کا رہائشی فنکار الہداد وسطڑو آنکھوں کی بینائی سے محروم ہونے کے بعد گذشتہ سات ماہ سے فالج میں بھی مبتلا ہو گیا ہے۔ الہداد وسطڑو کا خاندان فاقہ کشی سے دوچار ہوگیا ہے۔ حکومتی نمائندوں سمیت سماجی حقوق کی تنظیموں نے بھی ان کی خیریت دریافت نہیں کی۔ نابین فنکار الہداد وسطڑو نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آنکھوں کی بینائی جانے کے باعث تکلیفوں اور پریشانیوں میںمبتلا ہوگیا ہوں۔ زندگی عذاب اور بے رنگ ہو گئی۔
اس نے مزید کہا کہ دسمبر 2019 میں اچانک فالج ہونے کے باعث کمانے سے ہاتھ دھو بیٹھا ہوں جس سے گھر میں فاقے پڑ گئے ہیں۔ محکمہِ ثقافت نے کچھ مالی امداد کی تھی اور علاج کرایا تھا لیکن ابھی تک طبیعت ناساز ہے۔ انہوں نے وزیرِاعلیٰ سندھ سے اپیل کی کہ کرونا وائرس کے خوف سے گھر میں محصور ہو کر رہ گیا ہوں اور کھانے کو کچھ میسر نہیں ہے۔ لہٰذا میری مالی امداد کی جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں