لاڑکانہ: سماجی کارکن سجاد حسین کسی مسیحا کا منتظر

لاڑکانہ (رپورٹ، نور احمد عباسی) سیاسی و سماجی کارکن سجاد حسین کسی مسیحا کا منتظر ہے ۔ 25 سالہ نوجوان سجاد حسین گذشتہ سات برس سے سانس کے موذی مرض میں مبتلا ہے۔ سجاد علی کے ورثاء نے اپنا گھر بار بیچ کر سجاد کے اوپر خرچ کر دیا۔
سجاد کے ورثاء کا کہنا ہے کہ ڈاکٹروں نے جواب دے دیا ہے، سجاد کا علاج پاکستان میں ممکن نہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس کا علاج بیرونی ممالک میں ہو سکتا ہے جس کا خرچہ دو کروڑ سے زائد آ سکتا ہے۔ لہذا لاڑکانہ کے منتخب ایم این اے، پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کو اپیل کرتے ہیں کہ خدارا ہماری مدد کرکے سرکاری خرچے پر بیرونی ممالک میں سجاد علی کا علاج کروائیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں