ملیر، جھونپڑیوں کو آگ لگ گئی

ملیر(نامہ نگار، منظورسولنگی) گذشتہ روز میمن گوٹھ کے قریب ملیر چھاونی روڈ پر قائم کولہی برادری کی جھونپڑیوں میں اچانک آگ بھڑک اٹھی جس سے کئی جھونپڑیاں جل کر خاکستر ہو گئیں۔ اس موقع پر جھونپڑیوں میں موجود عورتوں اور بچوں میں چیخیں پڑ گئیں۔ علاقہ مکینوں نے اپنی مدد آپ کے تحت جھونپڑیوں میں موجود عورتوں اور بچوں کو باہر نکالا اور آگ بجھانے کی کوشش کی تب تک کئی جھونپڑیاں اور ان میں موجود موٹر سائیکل سمیت دیگر سامان جل کر راکھ کا ڈھیر بن گئیں۔
اطلاع ملتے ہی مختارکار سب ڈویژن مراد میمن گوٹھ برکت کلہوڑو اور صحافی پہنچ گئے جنہوں نے واقعی کی جگہ کا معائنہ کیا۔ اس موقع پر کرشن بھیل، ارجن، شنکر اور دیگر نے بتایا کہ آگ لگنے کا سبب معلوم نہیں ہو پایا۔ اچانک صبح کو کرشن بھیل کے گھر کو آگ لگ گئی تو سارے مکین نے مل کر اپنی مدد آپ کے تحت آگ بجھائی۔
انہوں نے بتایا کہ ایک ہفتے سے بیروزگار ہیں اور راشن بھی ختم ہو گیا ہے۔ بچے بھی بھوک و افلاس میں مبتلا ہیں، اوپر سے آگ نے سب کچھ جلا دیا۔ انہوں نے حکومتِ سندھ اور علاقے کے منتخب نمائندگان سے مدد کرنے کی اپیل کی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں