ملیر، اسٹیل مل انتظامیہ نے سی بی اے دفتر سیل کردیا

ملیر ( نامہ نگار، منظورسولنگی) اسٹیل مل میں موجودہ سی بی اے انصاف لیبر یونین کی مدت پوری ہونے کے بعد سی بی اے کے دفتر کو خالی کروانے کی مسلسل کوششوں کے باعث جاری تنازعہ کا تاحال کوئی حل نہیں نکل سکا۔ انتظامیہ کے خلاف سی بی اے کے دفتر خالی کرنے کی کوشش کے بعد این آئی سی کراچی دفتر سے حکم امتناعی حاصل کرلیا گیاہے تاہم گذشتہ شب سیکیورٹی اہلکاروں نے سی بی اے کے دفتر پہنچ کر تالے لگا کر دفتر بند کردیا۔ دوسرے روز اطلاع ملتے ہی سی بی اے عہدیدارو ں اور کارکنان نے سی بی اے دفتر پہنچ کر محکمہِ آئی آر اور سیکیورٹی افسران کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔
اس موقع پر سی بی اے کے جنرل سیکریٹری یاسین جامڑو کا کہنا تھا کہ انتظامیہ اور سی بی اے کے مابین نئے انتخابات تک موجودہ سی بی اے کے کام جاری رکھنے کا معاہدہ طے پایا تھا جس پر انتظامیہ عمل درآمد سے انکار کر رہی ہے۔ انتظامیہ کے اقدامات کے خلاف حکمِ امتناعی بھی حاصل کیا گیا ہے تاہم موجودہ آئی آر اور سیکیورٹی افسران دفتر کو سیل کرنے پر بضد تھے اور انہوں نے چوروں کی طرح رات کو دفتر کو سیل کردیا ہے جو مزدوروں کے حقوق اور جمہوری روایت کے بر خلاف ہے۔
انہوں نے مزید کہا کہ انتظامیہ تصادم چاہتی ہے تاکہ اسٹیل مل میں یونین پر بندش لگائی جاسکے۔ ہم آخری وقت تک مذاکرات اور قانونی راستے کے ذریعے تنازعہ کو حل کرانا چاہتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں