ملیر، سانحہِ کوہی گوٹھ کا ایک زخمی جاں بحق ہو گیا

ملیر (نامہ نگار، منظورسولنگی) باگڑی برادری کی آبادی کوہی گوٹھ پر بااثر افراد کے حملے میں تین عورتوں سمیت زخمی پانچ افراد میں سے عمر رسیدہ شخص لالو گذشتہ شب زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہوگیا۔ اطلاع پر سیکڑ وں باگڑیوں سمیت سماجی رہنما سنتوش کمار بھیل اور عوامی پریس کلب ملیر کے صحافی سجاد شاہ کی قیادت میں پہنچ گئے۔ اس موقع پر حملے میں زخمی لالو کے بیٹے بھگوانداس نے بتایا کہ ان کے والد عمر رسیدہ تھے جس نے حملہ آوروں کو روکنے کی کوشش کی تو انہوں نے کلہاڑی اور لاٹھیوں کے وار سے شدید زخمی کر دیا جس کے خلاف تھانہ شاہ لطیف میں مقدمہ درج کرایا اور ملزمان کو نامزد کیا گیا ہے لیکن پولیس اب تک ملزمان کو حراست میں لینے میں ناکام نظر آرہی ہے۔
اس دوران ان کے والد لالو زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے ہیں۔ دوسری جانب باگڑی برادری نے قانونی امداد نہ ہونے اور لاوارثی پر احتجاجی مظاہرہ کیا۔ ورثاء لالو کی لاش ٹنڈو جام لیکر روانہ ہو گئے۔ اس سے قبل بھگوانداس کا کہنا تھا کہ وہ واپسی پر عدالت کا دروازہ کھٹھٹاثئیں گے۔ انہوں نے سیاسی سماجی اور انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں کو اپیل کی کہ وہ ان کی اخلاقی، انسانی اور قانونی معاونت کریں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں