مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم دوسرے ماہ میں داخل ، مسلسل کرفیو، گرفتاریاں جاری

سرینگر: مقبوضہ وادی میں بھارتی فوج کے مظالم دوسرے ماہ میں داخل ہوگئے، کشمیری کرفیو اور سخت پابندیوں کے باوجود بھارتی فوج کے خلاف مظاہرے کر رہے ہیں، پیلٹ گن سے متعدد کشمیری زخمی ہوگئے اور کئی گرفتار ہیں۔مقبوضہ وادی میں بھارتی فوج کی جبری پابندیوں کے باعث انٹرنیٹ، موبائل سروس بند ہے، کاروبار، دکانیں اور تعلیمی ادارے بھی نہ کھل سکے، کئی علاقوں میں ہُوکا عالم ہے، مسلسل لاک ڈاؤں کی وجہ سے کھانے پینے کی اشیاء اور ادویات کی قلت پیدا ہوگئی۔ بھارتی فوج کا کشمیریوں کو گرفتار کرنے کا سلسلہ جاری ہے، رات گئے نوجوانوں کو ان کے گھروں سے اٹھایا جانے لگا، 5 اگست سے اب تک 11 ہزار کشمیریوں کو گرفتار کیا جا چکا ہے۔ بھارتی فوج نے محرم کے جلوس نکالنے پر پابندی عائد کر دی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں